Paisay Kharch Kese Kartey Ho? 4 Ashrafiyaan


 

پرانے زمانے کی بات ہےایک بادشاہ کا گزر ایک کھیت پرسے ہوا جہاں پر اس کی ملاقات ایک کسان سے ہوئی۔ کسان نے بقدرِ استطاعت بادشاہ کو کچھ کھانے پینے کو پیش کیا۔ بادشاہ کسان کی مہمان نوازی سے کافی متاثر ہوا اور اس سےباتیں کرنے لگا:۔
بادشاہ:۔ کتنے پیسے کما لیتے ہو۔
کسان:۔ عالیجاہ۔ چار اشرفیاں آمدن ہوجاتی ہے۔
… بادشاہ:۔ خرچ کیسے کرتے ہو؟
کسان:۔جناب۔ ایک اشرفی خود پر خرچ کرتا ہوں۔ ایک اشرفی ق…رض دیتا ہوں، ایک اشرفی قرض کی واپسی میں دیتا ہوں اور ایک اشرفی کنویں میں پھینکتا ہوں۔
بادشاہ:۔ میں سمجھا نہیں۔

کسان:۔
عالیجاہ۔ایک اشرفی اپنے اور اپنی بیوی پر خرچ کرتا ہوں،
ایک اشرفی اپنی اولاد پر خرچ کرتا ہوں[قرض دیتا ہوں] تاکہ جب میں اور میری بیوی بوڑھے ہوجائیں تو ہماری خدمت کریں،
ایک اشرفی اپنے والدین پر خرچ کرتا ہوں [قرض کی واپسی] کیونکہ انہوں نے مجھے پال پوس کر بڑھا کیا
اور ایک اشرفی خیرات کرتا ہوں [کنویں میں پھینکتا ہوں] کیونکہ اس کا بدلہ اس دنیا میں نہیں چاہتا۔

 

 

 

 

Advertisements

About NimdA

nothing

Posted on July 30, 2012, in اقتباس کولیکشن, اردو نثر. Bookmark the permalink. Leave a comment.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

%d bloggers like this: