Novel Hum Us k Hain se Iqtibas: Saima Akram Chaudhry


’میں محبت کے جذبے پر ایمان کی حد تک یقین رکھتا ہوں۔جو دل کے آنگن میں اچانک پھوٹتا ہے اور دیکھتے ہی دیکھتے ایک تن آور درخت کی صورت اختیار کر لیتا ہے۔مجھے چناب کی سوہنی،تھل کی سّسی،گاؤں کی ہیر اور روہی کے سردٹیلے میں گونجتی محبت کی دلکش …

پکار آج بھی اپنی طرف کھینچتی ہے۔محبت کے عظیم جذبے کی شاہراہ سے کئی راستے نکلتے ہیں۔جہاں وصل کی بارشیں بھی ہیں اور ہجر کی ویرانیاں بھی،اُداسی کی گھمبیر فضا اور روشنی کا سمندر بھی،غم کی دھوپ اور ملن کی چھاؤں کے خوشنما خواب بھی۔‘‘

(’’صائمہ اکرم چوہدری کے ناولٹ’’ہم اُس کے ہیں‘‘ سے ایک خوبصورت اقتباس

 

 

 

Advertisements

About NimdA

nothing

Posted on September 9, 2012, in اقتباس کولیکشن. Bookmark the permalink. Leave a comment.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

%d bloggers like this: