Allah Na Karay Woh Shetan Ho: Iqtibas From Novel Mushaf


 

لفظ شیطان کا روٹ ورڈ کیا تھا؟ شین‘ طا‘ نون (ش ط ن) شطن۔ یعنی اللہ کی رحمت سے دور‘ دھتکارا ہوا۔ او گاڈ‘ انہوں نے اپنے بچے کو اللہ کی رحمت سے دور ہوا کہہ دیا؟
“چچی۔” اس نے ہولے سے انہیں پکارا، فون کا ریسیور ابھی تک اس کے ہاتھ میں تھا۔
“ہاں؟” ناعمہ چچی نے پریشانی سے چونک کر اسے دیکھا۔
“معاز کو شیطان تو نہ کہیں۔ چچی اللہ! نہ کرے وہ شیطان ہو۔ شیطان تو اللہ کی رحمت سے دور ہونے کو کہتے ہیں۔”

(اقتباس: نمرہ احمد کے ناول “مصحف” سے)

 

Advertisements

About NimdA

nothing

Posted on September 19, 2012, in اقتباس کولیکشن, اردو نثر. Bookmark the permalink. Leave a comment.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

%d bloggers like this: