Muhabbat Mera Apna Masla Hai – Ghazal


محبت اپنا اپنا مسئلہ ہے
مری بیمار خواہش کو
کسی بیکار کاوش کا
نہ کوئی حوصلہ ہے
اور نہ اب تجھ سے گلہ ہے
دل کی نا آسودگی ۔۔۔ لازم نہیں
تیرے لیے بھی باعث ِ آزردگی ٹھہرے
ضروری تو نہیں میری کمی
تیری کمی ٹھہرے
محبت ۔۔۔
ہر کسی کا اپنا اپنا مسئلہ ہے
خواب کے ایوان ِبالا سے
بہت نیچی حقیقت تک
وفا کے جادۂ دشوار سے
بستر کی جنت تک
بدن کی لذت ِجاں تاب سے
دل کی ہزیمت تک
میں سب کچھ جانتی تھی
پھر بھی جانے کیوں گماں سا تھا
‘ مرے غم خانے سے
تیرے عزا خانے تلک ۔۔۔ سب
ایک درد ِ مشترک کا سلسلہ ہے’ ۔۔۔
شکریہ
تُو نے بلآخر آج یہ باور کرایا ہے
محبت ۔۔۔ میرا اپنا مسئلہ ہے

Keep Visiting Us

Advertisements

About NimdA

nothing

Posted on September 1, 2014, in اردو شاعری. Bookmark the permalink. Leave a comment.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

%d bloggers like this: