Ghazal: Guftagu Zaroori Hai – گفتگو ضروری ہے


 

آرزو ادھوری ہے
گفتگو ضروری ہے
آرزو کو پھیلانا
گفتگو کیے جانا
***
گفتگو کی کونپل ہی
پھول پھل کھلاتی ہے
گفتگو ہی انساں کی
شخصیت بناتی ہے
گفتگو ہی انساں کو
عرش سے ملاتی ہے
رنجشیں مٹاتی ہے
فاصلے گھٹاتی ہے
فاصلے ہیں دوری ہے
گفتگو ضروری ہے
***
گفتگو محبت ہے
گفتگو عبادت ہے
گفتگو ہے سرگوشی
گفتگو ہے خاموشی
عادتِ سحر خیزی
صورتِ گدایانہ
ذوق دیدِ جانانہ
گفتگو کیے جانا
***
ذرہ ذرہ صحرا ہے
قطرہ قطرہ دریا ہے
حرف حرف دفتر ہے
گفتگو کا لشکر ہے
گفتگو کا لشکر ہے
چشمکِ حریفانہ
گفتگو کیے جانا
***
گفتگو کی منزل ہو
گفتگو کا حاصل ہو
گفتگو کے رستوں میں
راہ ہو حکیمانہ
گفتگو کیے جانا
***
گفتگو مربی ہے
گفتگو مزکی ہے
دھیمے دھیمے چلتی ہے
نیتیں بدلتی ہے
گفتگو بناتی ہے
مسٹروں کو مولانا
گفتگو کیے جانا
***
گفتگو کے بارے میں
اور اتنا کہنا ہے
گفتگو کی منزل کے
دائرے میں رہنا ہے
***
اپنی گفتگوؤں کے
صرف ہم ہی شارح ہیں
اپنی اصطلاحیں تم
دوسروں کو مت دینا
دوسروں کے لہجے کو
اختیار کر لینا
گفتگو کے حق میں ایک
موت کا ہے پروانہ
گفتگو کے جنگل میں
بے شمار رستوں میں
خاص ایک پگڈنڈی
اپنی ہو جداگانہ
گفتگو کیے جانا
آرزو ادھوری ہے
گفتگو ضروری ہے
آرزو کو پھیلانا
گفتگو کیے جانا

Advertisements

About NimdA

nothing

Posted on September 7, 2014, in اقتباس کولیکشن. Bookmark the permalink. Leave a comment.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

%d bloggers like this: